سوڈان (السودان)کے دارالحکومت خرطوم میں ہفتے کے روز متحارب فورسز کے درمیان شروع ہونے والی جھڑپوں کے دوران میں فائرنگ سے سعودی عرب کے ایک مسافرطیارے کو نقصان پہنچا ہے۔

سعودی عرب کی قومی فضائی کمپنی السعودیہ نے ایک بیان میں بتایا ہے کہ خرطوم کے بین الاقوامی ہوائی اڈے پر طیارہ اس وقت فائرنگ کی زد میں آگیا جب وہ الریاض روانہ ہونے کی تیاری کر رہا تھا۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ طیارے کے عملہ کے تمام ارکان محفوظ ہیں اور انھیں بہ حفاظت خرطوم میں سعودی سفارت خانے میں پہنچا دیا گیا ہے۔

دریں اثناء سوڈان کی فضاؤں میں پرواز کرنے والے تمام سعودی طیارے مملکت میں واپس آگئے ہیں اورالسعودیہ ائیرلائنز نے سوڈان کے لیے اپنی تمام پروازوں کی آمد ورفت تاحکم ثانی معطل کردی ہے۔

بیان کے مطابق السعودیہ کا ایمرجنسی رابطہ مرکزکا عملہ گراؤنڈ اسٹاف اور سوڈان میں سعودی سفارت خانہ کے ارکان کے ساتھ مل کراس واقعہ کے بارے میں مزید معلومات حاصل کرنے کے لیے کام کر رہا ہے۔

خرطوم میں سوڈانی فوج اور نیم فوجی سریع الحرکت فورسز کے درمیان جھڑپیں ہورہی ہیں اور ان دونوں نے صدارتی محل اور بین الاقوامی ہوائی اڈے پرقبضے کے دعوے کیے ہیں۔سوڈانی ڈاکٹروں کی یونین کے مطابق ان جھڑپوں میں تین شہری ہلاک ہوئے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے