رونالڈو کی کوکا کولا پر پانی کو ترجیح: ’معمولی سی حرکت‘ اور کوکا کولا کو چار ارب ڈالر کا نقصان

دنیا کے امیر ترین فٹبالر کرسٹیانو رونالڈو کی ’ایک حرکت‘ سے کوکا کولا کے مارکیٹ شیئر 1.6 فیصد تک گر گئے ہیں۔

دنیا میں بیشتر ممالک میں رائج سرمایہ دارانہ نظام میں معروف برانڈز کی تشہیر کرتے کھلاڑی تو آپ نے بہت دیکھے ہوں گے لیکن رونالڈو پر یہ الزام عائد کیا جا رہا ہے کہ ان کی ایک حرکت سے کوکا کولا کے شیئرز میں وقتی گراوٹ کے باعث کمپنی کو چار ارب ڈالر کا مبینہ نقصان پہنچ گیا ہے۔

کرسٹیانو رونالڈو آج کل یوروکپ میں اپنی قومی ٹیم پرتگال کی نمائندگی کر رہے ہیں۔
تو واقعہ کچھ یوں پیش آیا کہ منگل کو ہنگری کے خلاف ایک گروپ میچ سے قبل انھوں نے ایک پریس کانفرنس میں آتے ہی اپنے سامنے رکھی کوکا کولا کی دو بوتلوں کو اٹھا کر ایک طرف رکھ دیا۔پھر انھوں نے پانی کی بوتل اٹھائی اور اسے لہرایا اور پرتگالی زبان میں لفظ ’ایگوا‘ کہا جس کے معنی ہیں ’پانی‘، یعنی بظاہر وہ سافٹ ڈرنک پر پانی کو ترجیح دینے کا اشارہ دے رہے تھے۔

یہ پریس کانفرنس پیر کے روز ہوئی تھی۔ یہ ویڈیو سامنے آتے ہی دنیا بھر میں شائقین اس پر طرح طرح کے تبصروں میں مصروف تھے مگر جلد ہی صورتحال اس وقت بدل گئی جب معیشت پر رپورٹ کرنے والے جریدوں نے کوکا کولا کے شیئرز میں گراوٹ کی خبر دی۔کوکا کولا کے شیئرز میں کمی کی وجوہات جو بھی ہوں مگر صارفین اس کو دنیا کے امیر ترین فٹبالر کی حرکت سے جوڑتے نظر آئے۔

کھیلوں کے موقر جریدے ‘دا ایتھلیٹک’ کے مطابق پیر کی صبح کو کوکا کولا کمپنی کے مارکیٹ میں فی حصص قیمت 56.1 ڈالر تھی مگر لگ بھگ اس وقت جب رونالڈو کی پریس کانفرنس ختم ہوئے تھوڑی دیر ہوئی تھی فی حصص قیمت 1.6 فیصد کم ہو کر 55.2 ڈالر تک گر گئی اور مارکیٹ کی قدر کے اعتبار سے یہ رقم چار ارب ڈالر بنتی ہے، یعنی کوکا کولا کی مجموعی مالیت 242 ارب ڈالر سے گھٹ کر 238 ارب ڈالر تک پہنچ گئی۔
البتہ دن کے اختتام تک فی حصص مالیت دوبارہ سے 55.29 ڈالر تک جا پہنچی۔ تاہم اس بات کی تصدیق نہیں ہو سکی ہے کہ آیا رونالڈو کے اس اقدام سے کوکا کولا کے شیئرز میں گراوٹ کا کوئی براہ راست تعلق ہے۔

کوکا کولا نے اگرچہ رونالڈو کی اس حرکت پر ردعمل ضرور دیا ہے تاہم شیئرز گرنے کے معاملے پر کوئی تبصرہ نہیں کیا گیا ہے۔

کوکا کولا نے کیا ردِعمل دیا؟
رونالڈو کی جانب سے کوکا کولا کی بوتلوں کو ایک طرف رکھنے کے بعد کوکا کولا کے ترجمان کی جانب سے کہا گیا ہے کہ ‘ہر کسی کو اپنی پسند کا مشروب کے انتخاب کی اجازت ہے اور ہر کسی کی پسند کا ذائقہ اور ضرورت مختلف ہوتی ہے۔‘’ہم ہر کھلاڑی کو پریس کانفرنس سے قبل ایک پانی کی بوتل، کوکا کولا اور کوک زیرو پیش کرتے ہیں۔’ تاہم کمپنی کی جانب سے شیئرز گرنے کے معاملے پر کوئی تبصرہ نہیں کیا گیا ہے۔

کوکا کولا یورو کپ کی آفیشل سپانسر ہونے کے ساتھ ساتھ رونالڈو کے موجودہ کلب یووینٹس کی سپانسر بھی ہے۔

رونالڈو کی صحت بخش غذا کی ترویج
سال کے بہترین کھلاڑی کا ایوارڈ بیلن ڈی اور پانچ مرتبہ جیتنے والے کرسٹیانو رونالڈو اس سے قبل بھی صحت بخش غذا کی ترویج کرتے آئے ہیں۔وہ 36 برس کے ہیں لیکن ان کی فٹنس لاجواب ہے جس کے باعث وہ آج بھی دنیا کے بہترین کھلاڑیوں میں سے ایک گردانے جاتے ہیں۔ وہ اپنی ورزش کے معمول اور روزانہ کی غذا کے حوالے سے اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ کے ذریعے تصاویر پوسٹ کرتے رہتے ہیں۔

رونالڈو اس سے قبل بھی بالواسطہ طور پر کوکا کولا نہ پینے کی ترغیب دے چکے ہیں۔ انھوں نے ایک انٹرویو کے دوران کہا تھا کہ وہ کبھی کبھی اپنے بیٹے سے اس وجہ سے ناراض ہو جاتے ہیں کیونکہ وہ کوکا کولا اور فانٹا یعنی سافٹ ڈرنکس پیتا ہے۔اپنی روزانہ کی غذا کا معمول شیئر کرتے ہوئے رونالڈو اپنے انسٹاگرام اکاؤنٹ کے ذریعے بتا چکے ہیں کہ وہ دن میں چھ مرتبہ تھوڑی تھوڑی مقدار میں کھانا کھاتے ہیں اور اس غذا کی خاص بات یہ ہوتی ہے کہ اس میں پروٹین کی مقدار زیادہ ہوتی ہے۔وہ بتاتے ہیں کہ ’میری غذا میں پھلوں اور سبزیوں کی بہتات ہوتی ہے اور میں میٹھی چیزوں سے اجتناب کرتا ہوں اور اس دوران پانی پینا بہت ضروری ہے۔‘

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے